وزرات اطلاعات کا فیک نیوز بتانے والا ٹوئیٹر اکاؤنٹ خود فیک ثابت ہو گیا، سپریم کورٹ نے پوسٹمارٹم کردیا

تصویر: ٹوئٹر سکرین شارٹ

لاہور (اے ٹی ایم نیوز آن لائن) سوشل میڈیا پر وزارت اطلاعات کی جانب سے خبروں کو جھوٹا قرار دینے کے لیے ایک باقاعدہ اکاونٹ بنایا گیا ہے جہاں سے تمام ٹی وی چینلز، اخبارات، اور سوشل میڈیا پر چلنے والی فیک خبروں کی تردید کی جاتی ہے کل نجی ٹی وی چینلز کی جانب سے خبر بریک ہوئی کہ وفاقی وزیر اعظم سواتی کی کال اٹینڈ نہ کرنے کے جرم میں آئی جی اسلام آباد جان محمد کو تبدیل کر دیا گیا، خبر بریک ہونے کے فورا بعد وزارت اطلاعات کے ٹوئیٹر پر فیک اکاونٹ نے ٹوئیٹ کیا اور اس خبر کو من گھڑت بے بنیاد اور ٹی وی چینل کا سکرین شارٹ لگا کر فیک نیوز کا ٹوئیٹ جڑ دیا اورسچائی پر مبنی خبر کو فیک نیوز کا سرٹیفکیٹ دے کر حقائق کے منافی قرار دے دیا.

آج سپریم کورٹ آف پاکستان کے چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے اس خبر پر از خود نوٹس لیا اور حقائق کھل کر سامنے آ گئے ، اٹارنی جنرل نے عدالت کو بتایا کہ وزیر اعظم کے زبانی احکامات پر آئی جی پنجاب کو تبدیل کیا گیا ہے.

جبکہ دوسری جانب مالدار وفاقی وزیر اعظم سواتی نے بھی سچ بول دیا اور کہا کہ آئی جی نے 22 گھنٹے میرا فون کال نہیں سنا جسکے بعد میں نے وزیر اعظم کو آئی جی پنجاب کے رویے بارے بتایا ،
دوسری جانب اس خبر کی ترجمان وزارت داخلہ بھی تردید کر چکا تھا ، لیکن آج عدالت نے وزیر اعظم کے زبانی احکامات کومعطل کرکے آئی جی اسلام آباد کو کام کرنے کا حکم دے دیا ۔ یہ حکم آئی جی کی واپسی کے ساتھ ساتھ فیک نیوز اکاونٹ کو بھی فیک بنا گیا.