بین الاقوامی این جی اوز پر پابندی کا معاملہ، سیکرٹری داخلہ طلب

اسلام آباد (اے ٹی ایم نیوز آن لائن) سینیٹ قائمہ کمیٹی برائے انسانی حقوق نے حکومت کی جانب سے حال ہی میں متعدد بین الاقوامی غیر سرکاری تنظیموں (آئی این جی اوز) کو ملک میں کام کرنے سے روکنے پرسیکریٹری داخلہ کو طلب کرلیا۔
کمیٹی کے چیئرمین مصطفیٰ نواز کھوکھر نے سیکریٹری داخلہ کو 5 نومبر کو کمیٹی کے سامنے پیش ہوکر ان تنظیموں پر پابندی لگانے سے متعلق معاملے کی وضاحت کرنے کا حکم جاری کیا۔ اس کے ساتھ سیکریٹری داخلہ کو ان آئی این جی اوز کے رجسٹریشن کے طریقہ کاراور قواعد وضوابط کے بارے میں مفصل بریفنگ دینے کی بھی ہدایت کی گئی۔
کمیٹی چیئرمین کا کہنا تھا کہ انہیں ان تنظیموں پر لگنے والی پابندی کے سبب ترقیاتی کاموں اور امداد و بحالی کے کاموں میں آنے والی رکاوٹ پر تشویش ہے، جس کے نتیجے میں براہِ راست غریب افراد متاثر ہوتے ہیں۔اس کے علاوہ ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ اس پابندی کے نتیجے میں ان شعبہ جات میں کام کرنے والے ہزاروں پاکستانی بھی بیروزگار ہوجائیں گے جس سے مزید مسائل پیدا ہوں گے۔
واضح رہے حکومت کی جانب سے بین الاقوامی غیر سرکاری تنظیوموں پر لگائی گئی پابندی کو عالمی سطح پر بھی تشویش کی نگاہ سے دیکھا جارہا ہے اور اس ضمن میں متعدد ممالک کے نمائندگان اور سفرتکاروں نے وزیراعظم عمران خان کے نام لکھے گئے خظ میں پالیسی پر نظرِ ثانی کی درخواست بھی کی۔وزیر اعظم عمران خان پہلے ہی اس بارے میں وزارت داخلہ کو اس معاملے کو تفصیل سے دیکھنے کے احکامات دے چکے ہیں لیکن تاحال کوئی پیش رفت نہیں ہوسکی۔