فضل الرحمان ٹولہ کو دن میں تارے، رات کو اسرائیلی طیارے نظر آتے ہیں، یہ کہتے ہیں این ار او، ہم کہتے ہیں نہ رو نہ رو ،فواد چوہدری

اسلام آباد (اے ٹی ایم نیوز آن لائن ) قومی اسمبلی کا گرما گرم اجلاس ہوا جس میں اپوزیشن نے وزیر خزانہ کی تقریر کے بعد ایوان سے چلے جانے کے بعد واک آوٹ کیا، خورشید شاہ نے کہا کہ ہم بیٹھے ہیں اور وزیر خزانہ بھاشن دیکر چلتے بنے ہیں لہذا وزراء کے اس رویے کے خلاف ہم ایوان سے واک آوٹ کرتے ہیں۔
اسمبلی اجلاس سے وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے دھواں دار خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اپوزیشن پریشان نہ ہو ہم ہر بات کا جواب تسلی بخش دیں گےاور ضرور دیں گے۔
یہ لوگ ملک کے خزانے کا فالودہ بنا کے ڈکار گئے، ان سب پر اربوں روپے کے کیس ہیں ، تین چار ارب تو یہ ایسے بانٹ کے کھا گئے جیسے بچوں میں چاکلٹ تقسیم کی جاتی ہے، انہوں نے غیرقانونی لاکھوں سیاسی ورکرز بھرتی کرکے اداروں کو تباہ کیا گیا ،نوزشریف کا سیاسی مستقبل ختم ہو چکا ہے، اب وہ ایوان کے اندر نہیں آ سکتا، باہر باہر رہے گا.
فواد چوہدری نے مزید تنقید کے نشتر چلاتے ہوئے کہا کہ اپوزیشن کا ایجنڈا ذاتی ہے، عوامی نہیں، نہ انکے پاس نظریہ ہے نہ لیڈر شپ ہے۔دو تین دن پہلے پوری قوم یوم سیاہ منا رہی تھی لیکن مولانا فضل الرحمان کا ایک مسیج دکھا دیں 1988سے کشمیری کمیٹی کو نوچتا رہا ہے کبھی مذاحمتی بیان نہیں دیا، مولانا کے بزرگ بھی پاکستان بنتے وقت برٹش راج کے ساتھ کھڑے تھے.
فواد چوہدری نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں ہم سب بحران سے نکل جائیں گے اور پاکستان وہ ملک بنے گا جو دنیا سے قرض لینے کی بجائے دیگا.