ایف آئی اے کی کارروائی، سوشل میڈیا پر خواتین کو ہراساں کرنے والا ملزم گرفتار

فائل فوٹو

راولپنڈی (اے ٹی ایم نیوز آن لائن) فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے) کے سائبر ونگ نے سوشل میڈیا پر خواتین کو ہراساں اور بلیک میل کرنے والے شخص کو راولپنڈی سے گرفتار کر لیا۔

ایف آئی اے آفیشلز کے مطابق ملزم تین بہنوں کو اس سے ناجائز تعلقات قائم کرنے پر زور دیتے ہوئے انہیں دھمکی دیتا تھا کہ اگر انہوں نے ایسا نہ کیا تو وہ ان کی تصاویر میں تبدیلیاں کر کے سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کر دے گا۔
تینوں خواتین کی شکایت پر ڈپٹی ڈائریکٹر محمود الحسن کی سربراہی میں تیار کردہ ٹیم نے ملزم کو گرفتار کیا۔
رواں سال مارچ میں لاہور کے مجسٹریٹ نے خواتین کو ہراساں اور بلیک کرنے والے ملزم کو چھ سال قید اور 7لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنائی تھی۔

مذکورہ مقدمے میں ملزم کو متاثرہ اہلخانہ کو 10لاکھ روپے بطور ہرجانہ ادا کرنے کا بھی حکم دیا گیا تھا۔
پولیس افسر سے لوٹ مار، فائرنگ سے زخمی
دوسری جانب خیبرپختونخوا میں لوٹ مار کے دوران فائرنگ کے تنیجے میں سینئر پولیس افسر زخمی ہو گئے۔

ایس ایس پی آپریشن جاوید اقبال نے میڈیا ےس گفتگو کرتے ہوئے اس بات کی تصدیق کی کہ ایڈیشنل انسپکٹر جنرل خالد عباس سے پشاور کے علاقے پشتاخارا میں لوٹ مار کی گئی اور فائرنگ کے نتیجے میں وہ زخمی ہو گئے۔
واقعے کی ایف آئی آر کے مطابق اے آئی جی اپنے گھر واپس آ رہے تھے کہ پشتکارا پولیس اسٹیشن کی حدود میں انہیں اسلحے کے زور پر لوٹ لیا گیا۔

واردات کے دوران ملزمان نے پولیس افسر پر فائرنگ بھی کی اور الٹے پاؤں میں گولی لگنے سے خالد عباس زخمی ہو گئے۔
ایڈیشنل انسپکٹر جنرل کے مطابق واردات کے وقت ان کے پاس 20ہزار اور ان کی اہلیہ کے پاس 30ہزار روہے تھے جو ملزمان اپنے ساتھ لے گئے۔