دنیا کا پہلا ہولوگرافک ڈسپلے والا اسمارٹ فون صارفین کے لیے دستیاب

فوٹو بشکریہ ریڈ

لاہور (اے ٹی ایم نیوز آن لائن) دنیا کا پہلا ‘ہولوگرافک’ ڈسپلے والا اسمارٹ فون ہائیڈروجن ون آخر کار متعارف کرا دیا گیا ہے۔
جب ریڈ نامی کمپنی نے گزشتہ سال ایک ہولوگرافک اسمارٹ فون متعارف کرانے کا اعلان کیا تھا کافی لوگ حیران رہ گئے تھے۔

ریڈ نامی کمپنی ڈیجیٹل کیمروں کے حوالے سے جانی جاتی ہے جنھیں ہولی وڈ میں فلموں کی عکسبندی کے لیے استعمال کیا جاتا ہے جیسے اسٹار وارز دی فورس اویکن یا حال ہی میں مشن امپاسبل سکس۔

فوٹو بشکریہ ریڈ

یہ فون 2018 کی پہلی سہ ماہی کے دوران پیش کیا جانا تھا مگر اس تاریخ کو پہلے موسم گرما اور پھر مزید آگے بڑھا دیتا گیا۔

مگر گزشتہ دنوں اسے باضابطہ طور پر متعارف کرایا گیا اور یہ نومبر کے شروع میں صارفین کے لیے دستیاب ہوگا۔

اس کا المونیم باڈی والا ورژن 1300 ڈالرز (لگ بھگ پونے دو لاکھ پاکستانی روپے) میں فروخت ہوگا جبکہ ٹائیٹنیم باڈی والا ایڈیشن 1600 ڈالرز (2 لاکھ 15 ہزار پاکستانی روپے) میں دستیاب ہوگا۔

مگر اب تک اس فون کے جو ریویوز سامنے آئے ہیں، ان سے لگتا ہے کہ اسے ٹیسٹ کرنے والے تھری ڈی اسکرین سے کچھ زیادہ متاثر نہیں۔

اور ایک مسئلہ یہ ہے کہ اس سے لی جانے والی تھری ڈی تصاویر یا ویڈیوز صرف دوسرے ہائیڈروجن ون میں ہی دیکھنا ممکن ہے اور نارمل کیمرے جیسے ایفیکٹ کو کیمرے کی آنکھ میں محفوظ کرنا ممکن نہیں۔

فوٹو بشکریہ ریڈ

اس فون کی ایک اور خاص بات موڈیول کی مدد سے اس ڈیوائس کو انتہائی جدید ویڈیو کیمرے میں بدل دینا ہے مگر یہ موڈیولر 2019 کے آخر تک دستیاب ہوگا۔
یہ فون 4 کیمروں (2 فرنٹ اور 2 بیک) کے ساتھ ہے، ڈوئل سم ٹرے اور 4510 ایم اے ایچ کی بڑی بیٹری بھی اس کا حصہ ہے۔

مگر اس فون سب سے حیرت انگیز فیچر اس کی اسکرین ہی ہے جس میں روایتی 2 ڈی مواد کے ساتھ اسٹیریو تھری ڈی مواد اور ہولوگرافک فور ویو یا فور وی مواد بغیر کسی خاص چشمے کے دیکھنا ممکن ہے۔

اس میں دی جانے والی فور وی ٹیکنالوجی ہی درحقیقت اس فون کو دیگر کے مقابلے میں منفرد بناتی ہے جس کی مدد سے یہ ڈیوائس ٹو ڈی میڈیا، تھری ڈی اسٹریو، اگیومینٹڈ رئیلٹی، ورچوئل رئیلٹی اور مکسڈ رئیلٹی وغیرہ کو اضافہ گلاسز یا ہیڈسیٹ کے بغر ہینڈل کرسکے گی۔

5.7 انچ اسکرین کا یہ اینڈرائیڈ فون اسنیپ ڈراگون 835 پراسیسر سے لیس ہے جو کہ مایوس کن ہے کیونکہ یہ گزشتہ سال کے بیشتر فلیگ شپ اسمارٹ فونز میں استعمال ہوا جبکہ رواں سال اسنیپ ڈراگون 845 کا استعمال ہورہا ہے۔